منتخب کرنا، تعارف، اور مزید بہت کچھ

3 منٹ
پڑھنے میں 3 منٹ لگیں گے
بیبی فارمولا: منتخب کرنا، کھلانا اور مزید بہت کچھ

کھانا کھلانے کے طریقے کا انتخاب کسی بھی والدین کے لیے ایک مشکل کام ہو سکتا ہے — لہذا جب بچے کی غذائی ضروریات کو پورا کرنے کی بات ہو تو یہاں کچھ چیزیں ہیں جن پر آپ غور کر سکتے ہیں۔

کینیڈا کے محکمہ صحت کے ذریعہ یہ تجویز دی جاتی ہے کہ، نوزائیدہ اور پاؤں پاؤں چلنے والے بچوں کی غذائیت، مامونیاتی تحفظ، نشو و نما اور بالیدگی کے لیے، آپ ابتدائی چھ مہینوں تک خصوصی طور پر دودھ پلائیں اور دو سال یا اس سے زیادہ لمبے عرصے تک مناسب تکمیلی خوراک برقرار رکھیں ۔1,2

اگر آپ کو دودھ پلانے میں مدد کی ضرورت ہو تو، نگہداشت صحت سے متعلق پیشہ ور افراد، اہل خانہ اور دوست احباب آپ کے نئے بچے کو دودھ پلانا سیکھنے کی اس مدت کے دوران آپ کی مدد، حوصلہ افزائی اور مشورے فراہم کرسکتے ہیں۔ 

ایسی متعدد وجوہات ہیں جہاں آپ ماں کے دودھ کی کمی کو پورا کرنے کے لیے فارمولا والا دودھ منتخب کر سکتے ہیں جیسے: بچے کا وزن اتنا نہیں ہے جتنا کہ ڈاکٹر چاہتا ہے، ماں کا دودھ بننے میں وقت لگ رہا ہے، یا شاذ مواقع پر، صحت سے متعلق تشویش کی وجہ سے آپ کو دودھ پلانے سے منع کیا گیا ہو تاکہ آپ کا بچہ محفوظ رہے۔

فارمولا کے متبادلات کو سمجھنے کے لیے یہاں کچھ مدد دی گئی ہے تاکہ آپ یہ طےکرسکیں کہ آپ اور آپ کے بچے کے لئے بہترین کیا ہے۔ 

حقائق 

  • گائے کے باضابطہ دودھ کے برعکس، بیبی فارمولا میں بچے کی صحت مندانہ نشو و نما اور بالیدگی کے لیے مطلوبہ پروٹین، کاربوہائڈریٹ، چربی، وٹامنز اور معدنیات کی تجویز کردہ مقدار شامل ہوتی ہے۔
  • صحت کی دیکھ بھال کے پیشہ ور افراد آئرن۔فورٹیفائڈ فارمولا کی تجویز پیش کرتے ہیں کیونکہ یہ پہلے سال کے دوران آپ کے بچے کے لئے تغذیہ کا مکمل ذریعہ پیش کرتا ہے۔1,2
  • کینیڈا میں تمام انفینٹ فارمولے غذائیت کے سخت ترین معیاروں پر پورے اترتے ہیں، لیکن تمام فارمولے ایک جیسے نہیں ہیں۔
  • 100% پھٹے ہوئے دودھ کا پانی(Whey)، جزوی طور پر ہائیڈرولائزڈ پروٹین: ایک قسم کا گائے کے دودھ کا پروٹین ہوتا ہےجسے جزوی طور پر چھوٹے ٹکڑوں میں توڑا گیا ہوتا ہے۔
  • اسپتالوں میں انفینٹ فارمولا کا ہر برانڈ موجود نہیں ہوتا (اس لیے بچے کی پیدائش سے قبل ہی خوراک کے تمام متبادلات پر غور کرلیں

ایسا فارمولا دیکھیں جس میں پروبایوٹکس اور DHA کے فوائد موجود ہوں۔

سائنسی ترقیات نے انفینٹ فارمولا کو پہلے سے کہیں زیادہ بہتر بنا دیا ہے— ایسا فارمولا منتخب کرنے پر غور کریں جس میں درج ذیل چیزیں شامل ہوں:

  • پروبایوٹک بی۔ لیکٹس: پروبایوٹکس ان فطری مدافعتی صفات میں سے ہیں جو ماں کے دودھ میں پائی جاتی ہیں۔ پروبایوٹک فارمولا میں بی۔لیکٹس شامل ہوتا ہے جو بچےکی آنت میں موجود صحت مند جراثیم (gut flora)کی افزائش میں معاون ہوتے ہیں۔
  • DHA اور ARA: DHA اور ARA، آپ کے بچے کے عام طبعی دماغ اور آنکھ کی نشوونما میں معاون ہوتے ہیں۔

فارمیٹ

انفینٹ فارمولا تین مختلف فارمیٹ میں آتا ہے اور آپ اپنے بچے کے لئے ایک، دو یا تینوں کا انتخاب کرسکتے ہیں—جو بھی آپ کے یومیہ معمول کے حساب سے مناسب ہو!

ریڈی۔ٹو۔فیڈ فارمولا

  • فارمولا سے آپ واقف نہیں؟ یہ استعمال میں آسان فارمیٹ آپ کی سہولت کے لئے بنایا گیا تھا۔
  • یہ بنے بنائے اسٹیرائل نرسر فارمیٹ میں آتا ہے (نپل لگائیں۔ گرم کریں*۔ پلائیں!)
  • الگ سے پانی نہ ملائیں **

مرتکز فارمولا

  • ’’پانی ملائیں‘‘مرتکز مائع انفینٹ فارمولا استعمال کرنے میں آسان ہوتا ہے اوراضافی سہولت کے لیے تیار کیا جاتا ہے۔
  • اضافی مقدار میں جراثیم سے پاک پانی کی ضرورت ہے** 
  • آسانی سے گھل مل جاتا ہے (کوئی گانٹھ یا سکوپس نہیں!)

پاؤڈر فارمولا 

  • آسان 
  • مؤثر لاگت 
  • مطلوبہ مقدار میں جراثیم سے پاک پانی میں پاؤڈر ڈالنے کی ضرورت ہوتی ہے ** 

اب بھی آپ کی ضرورت پوری نہیں ہوئی؟ یہاں بچوں کے فارمولوں کے بارے میں مزید معلومات حاصل کریں۔ 

انفینٹ فارمولا کو استعمال کرنا: مرحلہ وار 

فارمولا کے ساتھ ماں کے دودھ کی کمی کو پورا کرنے یا مکمل فارمولا فیڈنگ اپنانے کے لیے ان آسان ہدایات پر عمل کریں:

  1. بچے کو دوپہر میں دودھ پلانے کے بدلے بوتل سے دودھ پلائیں۔ بوتل سے دودھ پلانے کے درمیان معمولی مقدار میں دودھ نکال کر (اگر ضروری ہو تبھی) اپنے پستانوں کو آرام دیں۔
  2. بوتل سے دودھ پلاتے وقت سکون بخش انداز میں بات کریں اور زیادہ محبت کا اظہار کریں۔
  3. دودھ پلانے اور بوتل سے دودھ پلانے کے درمیان مطلوبہ توازن قائم ہونے تک ہر 2-3 دن میں بوتل سے دودھ پلانے کے ساتھ ایک بار پستان سے دودھ پلائیں۔

منتقلی سے متعلق کچھ اضافی خیالات 

  • جب آپ پہلی بار دودھ چھڑوانا شروع کرتے ہیں تو اسی دن دو بار بوتل سے دودھ نہ پلائیں۔
  • اگر آپ صبح اور شام دودھ پلانا جاری رکھتی ہیں، یا انہیں اپنے آخری متبادل کے طور پر رکھتی ہیں تو، آپ کو کام پر واپس لوٹنے یا دن کے وقت دودھ پلانے کا ذمہ دوسروں کے ساتھ شیئر کرنے میں زیادہ سہولت ہوگی۔
  • فارمولہ تک منتقلی آسانی سے ہوسکتی ہے، لیکن بعض اوقات اس میں تھوڑا زیادہ وقت لگتا ہے۔ (فکر کرنے کی کوئی بات نہیں!)

سبھی بچے اور مائیں مختلف ہوتی ہیں، لہذا اطمینان رکھیں، آرام کریں اور ساتھ ساتھ اپنے وقت سے لطف اٹھائیں۔

 

* فارمولے کو گرم کرنے کے لئے مائکروویو اوون کا استعمال نہ کریں، کیوں کہ اس سے بوتل میں گرم دھبے پیدا ہوسکتے ہیں جو آپ کے بچے کو جلاسکتے ہیں۔ 

** آپ کے بچے کی صحت اس بات پر منحصر ہے کہ آپ لیبل پر دیئے گئے تیار کرنے اور استعمال کرنے سے متعلق ہدایات کی کتنی اچھی طرح سے پیروی کرتے ہیں۔

حوالہ جات: 

  1. ہیلتھ کنینڈا، کینیڈین پیڈیاٹرک سوسائٹی، کنینیڈا کے ڈائیٹیشیئین، اور کینیڈا کی بریسٹ فیڈنگ کمیٹی کا مشترکہ بیان۔ صحت مند شیرخوار بچوں کے لئے تغذیہ: پیدائش سے لے کر چھ ماہ تک کی تجاویز۔ 2012. http://www.hc-sc.gc.ca/fn-an/nutrition/infant-nourisson/recom/index-eng.php 
  2. ہیلتھ کنینڈا، کینیڈین پیڈیاٹرک سوسائٹی، کنینیڈا کے ڈائیٹیشیئین، اور کینیڈا کی بریسٹ فیڈنگ کمیٹی کا مشترکہ بیان۔ صحت مند شیرخوار بچوں کے لئے تغذیہ: پیدائش سے لے کر 24 ماہ تک کی تجاویز۔۔ 2014. http://www.hc-sc.gc.ca/fn-an/nutrition/infant-nourisson/recom/recom-6-24...